Help us spread the message of change - Share with your friends

خواتین کے ساتھ بدتمیزی کسی صورت برداشت نہیں

گزشتہ روزلاہور میں ہونے والے جلسےمیں ہماری ٹیم موجود تھی. اگرچہ ہمارے سامنے کوئی بدنظمی نہیں ہوئی لیکن انٹرنیٹ پر جاری ایک ویڈیو دیکھ کربہت دکھ ہوا. تحریک انصاف کو اپنے انتظامی امور اور پارٹی کی تنظیم سازی میں بالکل دیر نہیں کرنی چاہیے. اور ہنگامی بنیادوں پر فول پروف سیکیورٹی فورس تشکیل دینی چاہیے جو اپنے آپ پر انحصار کرے. پولیس سے جلسے کی مکمل سیکیورٹی کی امید رکھنا فضول ہے. جب کبھی کہیں کوئی بدنظمی ہوتی ہے تو دور دور تک کوئی پولیس اہلکار نظر نہیں آتا. ہماری خواتین کو نشانہ بنایا جا رہا ہے اور مسلسل ایسے واقعات پیش آرہے ہیں. جو بھی افراد اس کے ذمہ دار ہیں انھیں بے نقاب کر کے قرار واقعی سزا دلوائی جائے

ہماری پی ٹی آئی لیڈرشپ سے بھی درخواست ہے کہ وہ سٹیج پر براجمان ہونے کی بجائے عوام میں بیٹھیں اور سیکیورٹی اور دیگر امور کی نگرانی خود کریں

ہزاروں لاکھوں کی تعداد میں کارکنوں کی موجودگی میں اگر کوئی شر پسند عناصر کسی قسم کی بدمزگی کا سبب بنتے ہیں تو یہ پوری پارٹی کے لیے انتہائی افسوسناک بات ہے. ہماری دوخواست ہے کہ تحریک انصاف کی لیڈرشپ اس بارے میں خاص احتیاط اور منصوبہ بندی کرے

اس بات میں کوئی شک نہیں کہ ن لیگ گھٹیا ھتکنڈے استعمال کر کے ہمارے جلسوں میں بدمزگی پیدا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں. خاص طور پر پنجاب پولیس کا کردار انتہائی مشکوک ہے. جب بھی کہیں کوئ مسئلہ ہوتا ہے پنجاب پولیس کے اہلکار موقع سے غائب ہو جاتے ہیں . سب سے نازک اور اہم موقع جلسے کا اختتام ہوتا ہے جب ہزاروں لاکھوں لوگ بیک وقت جلسہ گاہ سے نکلنے کی کوشش کرتے ہیں. یہ ہی وہ وقت ہوتا ہے جب ہمیں بھرپور احتیاط کی ضرورت ہےاور باقائدہ منصوبہ بندی کی بھی

Help us spread the message of change - Share with your friends